دیکھئے:عرب امارات کا علیشان صدارتی محل

Qasar-Al-Watan_01.jpg

ابو ظہبی میں واقع عرب امارات کا صدارتی محل’قصرالوطن‘ کو عوام کے لیے کھول دیا گیا۔ سفید رنگ کا یہ خوبصورت محل دیکھنے سے تعلق رکھتا ہے۔ اس میں داخلے کا ٹکٹ 60 درہم ہےجو آن لائن بھی خریدا جاسکتاہے۔ محل میں جگہ جگہ سیکورٹی اہلکار ’گائیڈ‘ کی حیثیت سے موجود ہیں جو عوام کی رہنمائی کرتے ہیں۔

محل میں داخلے کےوقت کسی بھی قسم کی دھاتی اشیا یا زیورات اندر لے جانے کی اجازت نہیں ۔یہاں پر موجود گائیڈ بتاتے ہیں کہ یہ ملک کا سب سے بڑا گنبد ہے جس کی اونچائی سات منزلہ عمارت کے مساوی اورچوڑائی37 میٹر ہے۔ اس گنبد کے چاروں کنارے خوبصورت منعکس کرنے والے آئینوں سے بنائے گئے ہیں جو فن تعمیر کا اعلیٰ نمونہ ہیں۔

محل میں ایک کانفرنس روم ہے جہاں مختلف معاملات پر بحث کے بعد فیصلے کیے جاتے ہیں ، کمرے میں ایک فانوس ہے جو تین لاکھ پچاس ہزار شیشوں کے ٹکڑ وں سے بنایا گیا ہے۔

محل میں ایک کمرہ تحائف کا بھی ہے جہاں فرانس کی جانب سے دیا گیا فیلکن یا ’باز ‘رکھا گیا ہے۔

محل میں ایک وسیع وعریض جگہ پر لائبریری قائم ہے جس میں کتابوں کی کثیر تعداد موجود ہے۔

محل میں مہمانوں کی ضیافت کے لیے ایک صدارتی بینکوئٹ موجود ہے جس میں دنیا کا اعلیٰ ترین فرنیچر موجود ہے ۔اس کمرے میں موجود کرسیاں ترکی سے بنوائی گئی ہیں جو فن کا اعلیٰ ترین نمونہ ہیں۔

اس محل کو دیکھنے والوں میں بھارت کے وزیر اعظم نریندر مودی بھی شامل تھے جن کی ضیافت کے لیے خصوصی طور پر ایک بھارتی شیف کو بلایا گیا تھا تاکہ وہ اپنے پسندیدہ کھانوں کا لطف لے سکیں۔

محل کے گارڈن میں جانے کے لیے علیحدہ ٹکٹ ہے جس میں بڑوں کا ٹکٹ 25درہم اور بچوں کا 12درہم ہے۔

ابوظہبی کے اس محل میں عرب ثقافت کی بھی شاندار عکاسی کی گئی ہے جو لوگوں کے لیے ایک یادگار کی سی حیثیت رکھتا ہے۔ اس کو ’قوم کا محل‘ بھی کہا جاتاہے جو متحدہ عرب امارات کو ثقافتی میراث میں ایک جھلک دے گا۔

Share this post

PinIt

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

scroll to top