بلی کے قتل کا انوکھا کیس، قاتل کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم

Cat-killed.jpg

کراچی کی مقامی عدالت نے ایک شہری کی درخواست پر بلی کو زخمی کرنے اوردوران علاج بلی کے دم ٹوڑدینے پر خاتون کار سوار کے خلاف قتل کامقدمہ درج کرنے کا حکم دے دیا۔

بلی کے زخمی ہوکر مرنے کایہ واقعہ ڈیفنس فیز 8 درخشاں تھانے کی حدود میں یکم فروری کو پیش آیا۔ موقع پر موجود ایک شہری اور پیشے کے اعتبار سے وکیل فائق جاگیرانی نے خاتون سے پہلے بلی کے علاج کا مطالبہ کیاجبکہ انکار پر پولیس کی مدد لے لی۔

پولیس نے بلی کے قتل کا مقدمہ درج کرنے سے انکار کیا تو شہری نے عدالت سے رجوع کر لیا ۔

عدالت میں باقاعدہ فائق جاگیرانی کی جانب سے دائر درخواست کی سماعت ہوئی۔سماعت کے بعد عدالت نے خاتون کار سوار کے خلاف بلی کے قتل کا مقدمہ درج کرنے کا حکم دے دیا ۔

سماعت کے بعد جاگیرانی نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ دنیا بھر میں بے زبان جانوروں کے حقوق کا تحفظ کیا جاتا ہےلیکن ہمارے یہاں ایسا نہیں ہوتا پولیس اور عدالت جانوروں کو تحفظ فراہم کرنے اور ان کے حقوق کے لئے اقدامات کرے ، اس مسئلے کو اہمیت دینے کی غرض سے میں نے عدالت کے دروازے پر دستک دی۔

فائق احمد جاگیرانی ایڈوکیٹ کا کہنا تھا کہ اگر ان بے زبان جانوروں کو انصاف فراہم کرنے کے لئے انسان آگے نہیں آئیں گے تو کون آئے گا؟

انہوں نے بتایا کہ وہ بلی کی قاتل کے خلاف قانونی جنگ لڑ کر ایک مثال بنانا چاہتے ہیں تاکہ کسی بھی شخص کو آئندہ معصوم جانوروں پر ظلم یا انہیں ایسے روندنے کا موقع نہ ملے۔

Share this post

PinIt

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

scroll to top